web analytics

مکتوب حضرت غوث اعظم ۱۲۔ زہد اور صالحوں کی صحبت کی ترغیب دلانے کے بیان میں

مکتوب مبارک حضرت محبوبِ سبحانی غوثِ صمدانی غوثِ اعظم سیدنا و مرشدنا سید عبد القادر جیلانی بغدادی رضی اللہ تعالیٰ عنہ (وفات ۵۴۱ھ)

حضرت شیخ شہاب الدین سہروردی رحمۃ اللہ علیہ کی طرف صادر فرمایا۔ زہد اور صالحوں کی صحبت کی ترغیب دلانے کے بیان میں۔

متابعة قراءة مکتوب حضرت غوث اعظم ۱۲۔ زہد اور صالحوں کی صحبت کی ترغیب دلانے کے بیان میں

نامہ مبارک حضرت خاتم المرسلین صلی اللہ علیہ وسلم، عمان کے حکمران بھائیوں جیفر اور عبد کے نام

نامہ مبارک حضرت سید الاولین والآخرین خاتم الانبیاء والمرسلین صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم (وصال مبارک ۱۱ھ)

ملک عمان کے دو حکمران بھائیوں جیفر و عبد کے نام، جو جلندی کے بیٹے تھے۔

متابعة قراءة نامہ مبارک حضرت خاتم المرسلین صلی اللہ علیہ وسلم، عمان کے حکمران بھائیوں جیفر اور عبد کے نام

نامہ مبارک حضرت خاتم المرسلین صلی اللہ علیہ وسلم بنام کسریٰ شاہِ فارس

نامہ مبارک حضرت سید الاولین والآخرین خاتم الانبیاء والمرسلین صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم (وصال مبارک ۱۱ھ)

یہ نامۂ مبارک آپ نے کسریٰ شاہِ فارس کو دعوتِ اسلام کے لئے بھیجا۔ فارس (ایران) اس زمانہ کی دو بڑی عالمی طاقتوں میں سے ایک تھی، جبکہ دوسری روم کی سلطنت تھی۔

متابعة قراءة نامہ مبارک حضرت خاتم المرسلین صلی اللہ علیہ وسلم بنام کسریٰ شاہِ فارس

نامہ مبارک حضرت خاتم المرسلین صلی اللہ علیہ وسلم بنام نجاشی

نامہ مبارک حضرت سید الاولین والآخرین خاتم الانبیاء والمرسلین صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم (وصال مبارک ۱۱ھ)

یہ نامۂ مبارک آپ نے نجاشی شاہِ حبشہ (وفات رجب ۹ھ) کو دعوتِ اسلام کے لئے بھیجا۔ اس نجاشی کا نام اصحمہ بن ابجز تھا۔

یہ خط عمرو بن امیہ ضمیری لے کر گئے تھے۔ جب یہ خط نجاشی کو ملا تو اس نے اس کو اپنی آنکھوں پر رکھا اور تخت سے اتر کر زمین پر بیٹھ گیا۔ اسلام قبول کیا، حق کی شہادت دی، ہاتھی دانت کا ڈبہ منگوا کر اس میں نامۂ مبارک کو رکھا اور کہنے لگا کہ جب تک یہ خط حبشہ میں رہے گا اہل حبشہ بخیریت رہیں گے۔ (خطوط ہادیِ اعظم)

متابعة قراءة نامہ مبارک حضرت خاتم المرسلین صلی اللہ علیہ وسلم بنام نجاشی

مکتوب حضرت یزید بن ابی سفیان بنام حضرت ابوبکر صدیق

مشہور صحابی حضرت یزید بن ابی سفیان رضی اللہ عنہ (وفات ۱۸ھ) کا مکتوب شریف، بنام خلیفۂ مسلمین و امیر المومنین سیدنا ابوبکر صدیق رضی اللہ عنہ

حضرت یزید بن ابی سفیان رضی اللہ عنہ ایک جلیل القدر صحابی تھے، جن کو حضرت ابوبکر صدیق نے اپنے دور خلافت میں شام کی طرف بھیجی گئی فوجوں میں سے ایک کا کمانڈر مقرر کیا تھا۔ اس نے ایک مرتبہ اپنی جنگی رپورٹ حضرت صدیقِ اکبر رضی اللہ عنہ کی خدمت میں بھیجی، جو یہاں نقل کی جاتی ہے۔

متابعة قراءة مکتوب حضرت یزید بن ابی سفیان بنام حضرت ابوبکر صدیق

مکتوب حضرت خالد بن ولید بطرف حضرت ابو عبیدہ بن جراح

مکتوب شریف حضرت سیدنا خالد بن ولید رضی اللہ عنہ (وفات ۲۱ھ)، بنام حضرت امین الامت سیدنا ابو عبیدہ بن جرّاح رضی اللہ عنہ

جب حضرت ابوبکر صدیق رضی اللہ عنہ نے اپنے دورِ خلافت میں شام میں مسلمان فوجوں کی کمان حضرت ابو عبیدہ بن جراح سے حضرت خالد بن ولید کو سپرد کی، تو اس پر حضرت خالد بن ولید نے حضرت ابو عبیدہ کو یہ مکتوب لکھا جس میں اپنی عاجزی کا اظہار کیا۔

واضح رہے کہ حضرت ابو عبیدہ بن جرّاح ایک پرانے صحابی تھے اور ان کی دینی حدیثیت و فضیلت حضرت خالد بن ولید سے زیادہ تھی جو خود فتح مکہ سے کچھ عرصہ پہلے مسلمان ہوئے۔

متابعة قراءة مکتوب حضرت خالد بن ولید بطرف حضرت ابو عبیدہ بن جراح

مکتوب خواجہ سراج الدین ۳۸۔ قبروں پر کتبے لگانا اور ان کو پختہ کرنے کے بیان میں

مکتوب شریف حضرت شیخ محمد سراج الدین دامانی نقشبندی مجددی (م 1333ھ)، سجادہ نشین خانقاہ احمدیہ سعیدیہ موسیٰ زئی شریف، ضلع ڈیرہ اسماعیل خان، پاکستان

یہ مکتوب آپ نے احمد خان صاحب کے نام تحریر فرمایا، قبروں پر کتبہ لگانے اور قبور کو پختہ کرنے کے بارے میں۔

متابعة قراءة مکتوب خواجہ سراج الدین ۳۸۔ قبروں پر کتبے لگانا اور ان کو پختہ کرنے کے بیان میں

مکتوب حاجی دوست محمد قندھاری ۲۶: دس رسالے جو فرقہ وہابیہ کے رد میں لکھے گئے ہیں

مکتوب شریف حضرت قطب الاقطاب شیخ حاجی دوست محمد قندھاری نقشبندی مجددی (وفات ۱۲۸۴ھ)، بانی خانقاہ احمدیہ سعیدیہ موسیٰ زئی شریف، ضلع ڈیرہ اسماعیل خان، پاکستان

بنام خان ملا خان صاحب، دس رسالے جو فرقہ وہابیہ کے رد میں لکھے گئے ہیں۔

متابعة قراءة مکتوب حاجی دوست محمد قندھاری ۲۶: دس رسالے جو فرقہ وہابیہ کے رد میں لکھے گئے ہیں

مکتوب حاجی دوست محمد قندھاری ۳۰۔ بنام مولوی عبداللہ صاحب، فرقہ وہابیہ کے عقائد سے اجتناب کرنے کے بیان میں

مکتوب شریف حضرت قطب الاقطاب شیخ حاجی دوست محمد قندھاری نقشبندی مجددی (وفات ۱۲۸۴ھ)، بانی خانقاہ احمدیہ سعیدیہ موسیٰ زئی شریف، ضلع ڈیرہ اسماعیل خان، پاکستان

بنام مولوی عبداللہ صاحب، فرقہ وہابیہ کے عقائد سے اجتناب کرنے کے بیان میں۔

متابعة قراءة مکتوب حاجی دوست محمد قندھاری ۳۰۔ بنام مولوی عبداللہ صاحب، فرقہ وہابیہ کے عقائد سے اجتناب کرنے کے بیان میں

مکتوب شاہ احمد سعید مجددی ۳۷۔ مولود شریف پڑھنے کے بارے میں

مکتوب شریف حضرت شیخ المشائخ حافظ شاہ احمد سعید مجددی فاروقی دہلوی مہاجر مدنی رحمۃ اللہ علیہ (وفات ۱۲۷۷ھ)، سجادہ نشین خانقاہ مظہریہ، دہلی، مدفون در جنت البقیع، مدینہ منورہ

یہ مکتوب آپ نے اپنے خلیفۂ اعظم حضرت حاجی دوست محمد قندھاری رحمۃ اللہ علیہ کی طرف لکھا۔ مولود شریف پڑھنے کے بارے میں، اور مولود سے روکنے والوں سے دور رہنے کی نصیحت۔

متابعة قراءة مکتوب شاہ احمد سعید مجددی ۳۷۔ مولود شریف پڑھنے کے بارے میں

مکتوب خواجہ محمد زبیر سرہندی: اپنے خلیفہ شیخ محمد احسان مجددی کی طرف ان کے شاعرانہ مکتوب کے جواب میں

مکتوب شریف قیومِ چہارم حضرت خواجہ محمد زبیر سرہندی مجددی فاروقی نقشبندی رحمۃ اللہ علیہ (وفات ۱۱۵۲ھ)، خلیفۂ مجاز حضرت خواجہ حجۃ اللہ سرہندی رحمۃ اللہ علیہ

یہ مکتوب آپ نے اپنے مرید و خلیفہ حضرت شیخ محمد احسان مجددی نقشبندی رحمۃ اللہ علیہ کی طرف ان کے شاعرانہ مکتوب کے جواب میں صادر فرمایا۔ یہ مکتوب بھی شاعری میں مثنوی کی طرز پر لکھا گیا۔

متابعة قراءة مکتوب خواجہ محمد زبیر سرہندی: اپنے خلیفہ شیخ محمد احسان مجددی کی طرف ان کے شاعرانہ مکتوب کے جواب میں

مکتوب شیخ محمد احسان مجددی در خدمت پیر و مرشدِ خود خواجہ محمد زبیر سرہندی

مکتوب شریف حضرت شیخ محمد احسان مجددی فاروقی رحمۃ اللہ علیہ، خلیفہ خواجہ محمد زبیر سرہندی رحمۃ اللہ علیہ

یہ مکتوب آپ نے اپنے پیر و مرشد حضرت خواجہ محمد زبیر سرہندی مجددی نقشبندی رحمۃ اللہ علیہ کی خدمت میں ارسال کیا۔ یہ پورا مکتوب شاعری میں مثنوی کی طرز پر لکھا گیا۔ حضرت خواجہ محمد زبیر نے اس کا جواب بھی شاعری میں دیا۔
(جو یہاں پڑھا جا سکتا ہے)

متابعة قراءة مکتوب شیخ محمد احسان مجددی در خدمت پیر و مرشدِ خود خواجہ محمد زبیر سرہندی

مکتوب خواجہ محمد سعید سرہندی ۱۷: اپنے فرزند شیخ عبد الاحد کی طرف، بسم اللہ کے اسرار میں

مکتوب شریف حضرت زبدۃ العارفین خواجہ محمد سعید سرہندی فاروقی نقشبندی رحمۃ اللہ علیہ (وفات ۱۰۷۰ھ)، فرزند ثانی حضرت امام ربانی مجدد الف ثانی رضی اللہ تعالیٰ عنہ

اپنے فرزند حضرت شیخ عبد الاحد وحدت سرہندی رحمۃ اللہ علیہ کی طرف، بسم اللہ الرحمٰن الرحیم کے اسرار کے بیان میں تحریر فرمایا۔

متابعة قراءة مکتوب خواجہ محمد سعید سرہندی ۱۷: اپنے فرزند شیخ عبد الاحد کی طرف، بسم اللہ کے اسرار میں

مکتوب خواجہ محمد صدیق کشمی در خدمت مخدوم زادہ خواجہ محمد سعید سرہندی

مکتوب شریف حضرت مولانا خواجہ محمد صدیق کشمی رحمۃ اللہ علیہ (وفات شوال ۱۰۵۰ھ)، خلیفہ حضرت امام ربانی مجدد الف ثانی رضی اللہ تعالیٰ عنہ

یہ مکتوب آپ نے اپنے مخدوم زادہ حضرت خواجہ محمد سعید سرہندی فاروقی نقشبندی رحمۃ اللہ علیہ (م ۱۰۷۲ھ) کی خدمت میں تحریر فرمایا، جس میں اپنی عقیدت و محبت کا اظہار کیا ہے۔

متابعة قراءة مکتوب خواجہ محمد صدیق کشمی در خدمت مخدوم زادہ خواجہ محمد سعید سرہندی

مکتوب مولانا محمد صالح کولابی در خدمت پیر و مرشدِ خود حضرت مجدد الف ثانی

مکتوب شریف حضرت مولانا شیخ محمد صالح کولابی نقشبندی مجددی رحمۃ اللہ علیہ (وفات ۱۰۳۸ھ)، خلیفہ حضرت امام ربانی مجدد الف ثانی رضی اللہ تعالیٰ عنہ

یہ مکتوب آپ نے اپنے پیر و مرشد حضرت مجدد الف ثانی شیخ احمد سرہندی فاروقی رضی اللہ تعالیٰ عنہ کی خدمت میں تحریر کیا۔

متابعة قراءة مکتوب مولانا محمد صالح کولابی در خدمت پیر و مرشدِ خود حضرت مجدد الف ثانی

مکتوب خواجہ عبید اللہ احرار۔ بنام مولانا عبد الرحمٰن جامی

مکتوب شریف حضرت خواجۂ خواجگان قطب الاقطاب سیدنا خواجہ عبید اللہ احرار سمرقندی نقشبندی رضی اللہ تعالیٰ عنہ (وفات ۸۹۵ھ)

حضرت مولانا عبد الرحمٰن جامی قدس سرہٗ کی طرف تحریر فرمایا۔

بے شک مولانا جامی اپنے آپ کو خواجہ احرار کا ایک راسخ العقیدہ نیاز مند سمجھتے تھے، لیکن مندرجہ ذیل خط سے معلوم ہوتا ہے کہ خود خواجہ احرار کو مولانا سے کیا قربت حاصل تھی اور ان کا کس قدر احترام کرتے تھے۔ خواجہ احرار نے الفاظ کا چناؤ اس طرح کیا ہے گویا وہ مرید اور مولانا جامی مراد ہوں۔ (عارف نوشاہی)

متابعة قراءة مکتوب خواجہ عبید اللہ احرار۔ بنام مولانا عبد الرحمٰن جامی

مکتوب خواجہ عبید اللہ احرار۔ اپنے پوتے خواجہ محی الدین عبد الحق کی طرف

مکتوب شریف حضرت خواجۂ خواجگان قطب الاقطاب سیدنا خواجہ عبید اللہ احرار سمرقندی نقشبندی رضی اللہ تعالیٰ عنہ (وفات ۸۹۵ھ)

اپنے پوتے خواجہ محی الدین عبد الحق کی طرف تحریر فرمایا۔

متابعة قراءة مکتوب خواجہ عبید اللہ احرار۔ اپنے پوتے خواجہ محی الدین عبد الحق کی طرف

مکتوب خواجہ عبید اللہ احرار۔ میر علی شیر نوائی کی طرف

مکتوب شریف حضرت خواجۂ خواجگان قطب الاقطاب سیدنا خواجہ عبید اللہ احرار سمرقندی نقشبندی رضی اللہ تعالیٰ عنہ (وفات ۸۹۵ھ)

میر علی شیر نوائی کی طرف تحریر فرمایا۔

متابعة قراءة مکتوب خواجہ عبید اللہ احرار۔ میر علی شیر نوائی کی طرف

مکتوب خواجہ عبید اللہ احرار۔ بنام سلطان حسین مرزا بایقرا

مکتوب شریف حضرت خواجۂ خواجگان قطب الاقطاب سیدنا خواجہ عبید اللہ احرار سمرقندی نقشبندی رضی اللہ تعالیٰ عنہ (وفات ۸۹۵ھ)

ہرات کے والی سلطان حسین مرزا بایقرا کی طرف تحریر فرمایا۔

متابعة قراءة مکتوب خواجہ عبید اللہ احرار۔ بنام سلطان حسین مرزا بایقرا

مکتوب خواجہ عبید اللہ احرار۔ بنام سلطان ابو سعید مرزا، سمرقند پر حملہ کرنے سے منع کرنے میں

مکتوب شریف حضرت خواجۂ خواجگان قطب الاقطاب سیدنا خواجہ عبید اللہ احرار سمرقندی نقشبندی رضی اللہ تعالیٰ عنہ (وفات ۸۹۵ھ)

شہر سمرقند پر حملہ کرنے کے ارادہ سے منع کرنے کے لیے سلطان ابو سعید مرزا کو تحریر فرمایا، جو امیر تیمور کے پڑ پوتے اور مغل بادشاہ ظہیر الدین بابر کے دادا تھے۔

متابعة قراءة مکتوب خواجہ عبید اللہ احرار۔ بنام سلطان ابو سعید مرزا، سمرقند پر حملہ کرنے سے منع کرنے میں

مکتوبات شریف